Skip to main content

Posts

Showing posts from May, 2014

BARA BURJO.N KI KHASIYAT MARDO.N KE LIYE بارہ برجوں کی خاصیت مردوں کے لئے ( Peculiarity Of Zodiac Sign For Men)

BARA BURJO.N KI KHASIYAT MARDO.N KE LIYE           JIS MARD KE WASTE DEKHNA HO USKA AUR USKI MA KE NAAM KE ADAAD JOD KAR BARA SE TAQSEEM KARE.N AGAR 1 BACHE TO HAMAL 2 BACHE TO SAUR 3 BACHE TO JOOZA 4 BACHE TO SARTAAN 5 BACHE TO ASAD 6 BACHE TO SUNBLA 7 BACHE TO MIZAAN 8 BACHE TO AQRAB 9 BACHE QAUS 10 BACHE TO JADDI 11 BACHE TODALU AUR AGAR PURA TAQSEEM HOJAYE TO HAUT JO ADAD HASIL HO USKA SAMRA DEKH LE.N ·          BURJ E HAMAL  SITARA USKA MAREEKH IS TAA’LA KA MARD KHUSH TAB’A KHUSH KHALQ HOGA- DO AURTIEN USKI QISMAT ME HAI-MAGAR AARAAM EK HI SE PAYEGA-AULAAD BAHUT HOGI-SIYAAH LIBAAS USKE LIYE NAAMUNASIB HAI-AKSAR BURE KAAM KARKE SHARMINDA HOGA –AAG W PAANI SE BACHNA BEHTAR RAHEGA-NAZRE BAD SE AK-SAR NUQSAAN PAHUNCHEGA- AQEEQ KI ANGHUTI USKO PEH-ENNA KHOOB HOGA-KHARIDO FAROKHT YANI TIJARAT SE NAFA HOGA AGAR KUCH NUQSAAN BHI HOTO JALD BADAL HO JAYEGA-ZINDAGI KA PEHLA DAUR TAKLEEF ME DUSRA DAUR MATU-SAT AUR TEESRA DAUR AARAAM SE GUZRE GA-IBADATE KHUDA ME KAHELI HARGIZ NA K

ZAKAAT E AMAL KI QISME.N زکات ِعمل کی قسمیں (Method Of Zakat For Spiritual Spell)

          ZAKAAT  E AMAL KI QISMIEN YE EK AISA RAAZ PINHA HAI JISSE HAZARO AMILEEN WAQIF NAHIN SIRF KAMELEEN KE IRSHAD KE MUTABIQ AMAL KARTE RAHE AUR USI KI TALEEM DUSRO KO DETE RAHE ZYADA SE ZYA- DA KISI SAA’EL KE JAWAB ME YE FARMA DETE KE KISI AAYAT YA ISM KI ZAKAAT SAWA LAAKH HAI JO 41 YAUM ME PURI KARNI HAI-ISKE SIWA YE ILM NAHIN KE SAWA LAAKH KI TA’DAAD HAR AAYAT YA ISM KI HAI AUR WO ZAKAAT KI QISMO ME SE KIS QI- SM KI ZAKAAT HAI-AYA SAWA LAAKH KI ZAKAAT ADA KARNE KE BAAD IS AMAL SE UMR BHAR KAAM LE SAKTE HAI YA WAQTI TAUR PAR AGAR UMR BHAR KE LIYE AAMIL HO JAYEGA TO HAR ROZ KISI MAKHSUS TA’DAAD ME PADHNE KI ZARURAT HAI YA NAHIN- ·          QISM AWWAL:  AAMIL APNE NAAM KE A’DAAD KE KE MUTAB- IQ 41 YAUM ROZANA PADHE TO WO AMAL EK DAFA KAAM DE- GA HAMESHA NAHIN- ·          QISM DOEM : JO AMAL PADHNA HO USKE HURF KI TA’DAAD JI- TNI HO UTNI HAZAAR MARTABA ROZANA 41 YAUM PADHE TO HAMESHA KE LIYE AAMIL HO JAYEGA-AAMIL USKA SAIFE ZUB- AN HO J

BHAGE HUE MARD YA AURAT KO BULANE KA AMAL بھاگے ہوئے مرد یا عورت کو بلانے کا عمل (To Get back who Ran Away)

SHARAF E MUSHTARI KA TAARUF MA TAREEQ E AMAL شرف مشتری کا تعارف مع طریق عمل (Introduction Of Jupiter Glory With Instruction Of Making Talisman)

TASLEES ATARAD O ZUHAL UN MARIZON KE LIYE JINE DOCTOR NE JAWAB DE DIA HO تثلیث عطارد و زحل ان مریضوں کے لئے جنہیں ڈاکٹروں نے جواب دے دیا ہو (Remedy For Disease Cannot Be Find Out)

حصول رزق امتحان میں کامیابی اعلی تعلیم کے لئے شرف عطارد اور عطاردی نظرات با دیگر سیارگان HUSSOLE RIZQ IMTEHAN ME KAAMYABI AALA TALEEM KE LIYE SHARAF ATARAD AUR ATARDI NAZRAAT BA DIGAR SAIYAARGAAN

دشمن کو سزا دینے اور دشمنی سے باز رکھنے کے لئے قرآن مریخ و زحل کا عمل DUSHMAN KO SAZA DENE AUR DUSHMANI SE BAAZ RAKHNE KE LIYE QIRAAN MARRIKH O ZUHAL KA AMAL

HAAZRI MAHBOOB KA ZABARDAST AMAL ZOHRA حاضری محبوب کا زبردست عمل زہرہ (Powerful Venus Spell To Get Present Of Beloved)

LOHE QUWAT E BAAH لوح قوت باہ ( Talisman For Strength Vigour Sexual )

Ek Bemisaal Roohani Tohfa Lohe Taskhir e Laasaani ایک بے مثال روحانی تحفہ لوح تسخیر لاثانی (An Unmatched Spiritual Gift)

Huzoor Sultanulhind Khwaja Gharib Nawaz Raziallah Ta'ala Anho ki Mukhtasar Sawaneh حضور سلطان الہند خواجہ معین الدین چشتی رضی اللہ تعالی عنہ کی مختصر سوانح

اللہ تعالیٰ نے ہندوستان میں لوگوں کی روحانی تربیت اور اسلام کی تبلیغ و اشاعت اور تحفظ و استحکام کے لیے طریقت کے جس خاندان کو منتخب فرمایا وہ سلسلۂ چشت ہے اس سلسلہ کی نامور اور بزرگ ہستی خواجہ غریب نواز حضرت معین الدین چشتی رحمۃ اللہ علیہ کو ہندوستان میں اسلامی حکومت کی بنیاد سے پہلے ہی اس بات کا غیبی طور پر اشارا مل چکا تھا کہ وہ سرزمینِ ہند کو اپنی تبلیغی و اشاعتی سرگرمیوں کا مرکز بنائیں۔  چشت جس کی جانب اس سلسلہ کو منسوب کیا جاتا ہے وہ خراسان میں ہرات کے قریب ایک مشہور شہر ہے جہاں اللہ تعالیٰ کے کچھ نیک بندوں نے انسانوں کی روحانی تربیت اور تزکیۂ نفس کے لیے ایک بڑا مرکز قائم کیا۔ ان حضرات کے طریقۂ تبلیغ اور رشد و ہدایت نے پوری دنیا میں شہرت و مقبولیت حاصل کرلی اور اسے اس شہر چشت کی نسبت سے ’’چشتیہ‘‘ کہا جانے لگا۔ چشت موجودہ جغرافیہ کے مطابق افغانستان میں ہرات کے قریب واقع ہے۔  سلسلۂ چشتیہ کے بانی حضرت ابو اسحاق شامی رحمۃ اللہ علیہ ہیں۔ سب سے پہلے لفظ ’’چشتی‘‘ ان ہی کے نام کا جز بنا، لیکن حضرت خواجہ معین الدین چشتی حسن سنجری رحمۃ اللہ علیہ کی شخصیت نے اس سلسلہ